Eid ki namaz ka tarika niyat waqt hukam aur dua | عید کی نماز کا طریقہ نیت وقت حکم دعا اور مسائل

 اس تحریر میں عید کی نماز کے حوالے سے چند اہم سوالات کو شامل کیا گیا ہے، ہر سوال کے شروع میں ایک نمبر ہے، اسی ترتیب سے سوالوں کے جوابات دیے گئے ہیں، آپ اپنے مطلوبہ سوال کے  نمبر کے مطابق جواب دیکھ لیں، اس کے آخر میں ایک وڈیو بھی ہے جس میں ان سب سوالوں کے جوابات موجود ہیں، آپ اسے بھی ملاحظہ فرما سکتے ہیں۔


سوالات:

  1. عید کی نماز کا وقت کیا ہے؟ 
  2. عید الفطر اور عید الاضحی کی نماز میں کیا فرق ہے؟
  3. عید کی نماز کا حکم کیا ہے ؟ 
  4. کیا عید کی نماز کی قضا ء ہوتی ہے؟ 
  5.  کیا عید کی نماز اکیلئے گھر پر پڑھ سکتے ہیں؟ 
  6. عید کی نماز کے بعد دعا مانگنا کیسا ہے؟
  7.  کیا عید کی نماز عورتیں پڑھ سکتی ہیں؟
  8. عید کی نماز میں نیت کیسے  کرتے ہیں؟
  9.  عید کی نماز میں کتنی تکبیریں ہوتی ہیں، کن تکبیروں میں ہاتھ اٹھاتے ہیں اور کن تکبیرات میں ہاتھ نہیں اٹھاتے، ان تکبیرات کو زائد کیوں کہتے ہیں؟ 
  10. کن تکبیرات کے بعد ہاتھ باندھتے ہیں اور کن تکبیروں کے بعد ہاتھ نہیں باندھتے۔
  11. عید کی نماز کا طریقہ بھی تفصیل سے بتا دیں ۔

 



عید کی نماز کا وقت | Eid ki namaz ka time

 دونوں عیدوں کی نماز کا وقت اشراق سے شروع ہو کر زوال تک ہوتا ہے  البتہ عید الاضحی کو جلدی پڑھنا مستحب ہے تاکہ لوگ باآسانی قربانی کرسکیں اور عید الفطر میں کچھ تاخیر کرنا افضل ہے تاکہ  لوگ پہلے صدقہ فطر ادا کر سکیں۔

 

عید الفطر اور عید الاضحی کی نماز میں کیا فرق ہے ؟ |Eid ul fitar aur eid ul adha ki namaz me farq

عید الفطر اور عید الاضحی کی نماز میں کوئی فرق نہیں ہے دونوں کی نماز ایک ہی طرح پڑھتے ہیں۔

 

عید کی نماز کا حکم کیا ہے ؟ | Eid ki namaz ka hukam

عید کی نماز ہر اس شخص پر واجب ہے جس پر جمعہ کی نماز واجب ہے، فتاوی عالمگیری میں ہے:

تَجِبُ صَلَاةُ الْعِيدِ عَلَى كُلِّ مَنْ تَجِبُ عَلَيْهِ صَلَاةُ الْجُمُعَةِ

 

کیا عید کی نماز کی قضاء ہوتی ہے؟ | Eid ki namaz ki qaza

عید کی نماز کی قضاء نہیں ہوتی ۔

 

کیا عید کی نماز اکیلے گھر پر پڑھ سکتے ہیں؟ | Eid ki namaz at home urdu

اس کیلئے جماعت اور وقت دونوں ہونا شرط ہے، اس لیے اسے انفرادی طور پر نہیں پڑھا جاسکتا۔  

 

کیا عید کی نماز کے بعد دعا مانگنا جائز ہے ؟ | Eid ki namaz k bad dua 

عید کی نماز کے بعد دعا مانگنا بالکل جائز ہے ۔

 

کیا عید کی نماز عورتیں پڑھ سکتی ہیں ؟ | Eid ki namaz for ladies at home

ان کیلئے یہ نماز پڑھنا ضروری نہیں ہے،اس نماز کو اکیلے نہیں پڑھا جاسکتا ۔

 

عید کی نماز کی نیت | Eid ki namaz ki niyat

عید کی نماز میں نیت یوں کرتے ہیں ،میں نیت کرتا ہوں دو رکعت نماز عید الفطر یا عید الاضحی کی،ساتھ چھ زائد تکبیرات کے  ،واسطے اللہ تعالی کے، پیچھے اس امام صاحب کے ،منہ میرا طرف خانہ کعبہ شریف ،اللہ اکبر

 

عید کی نماز میں تکبیروں کی تعداد | namaz e eid ki takbeer kitni hai

عید کی نماز میں نو تکبیرات ہوتی ہیں، سب سے پہلے تکبیر تحریمہ جو نماز کے شروع میں ہوتی ہےپھر ثناء کے بعد تین زائد تکبیرات ،پھر رکوع کی تکبیر،اس کے بعد دوسری رکعت میں تین زائد تکبیرات اور رکوع کی تکبیر ۔

 

کن تکبیرات میں ہاتھ اٹھاتے ہیں؟ | Eid ki namaz me kab hath uthaty hein 

عید کی نماز میں جوتکبیرات زائد ہیں ان میں ہاتھ اٹھاتے ہیں اور جو زائد نہیں ہیں ان میں ہاتھ نہیں اٹھاتے،تکبیر تحریمہ کا حکم الگ ہے، اس میں ہاتھ اٹھانے ہیں۔  

 

ان تکبیرات کو زائد کیوں کہتے ہیں؟ | Eid ki takbeero ko zaid kyo kehty hein 

ان تکبیرات کو زائد اس وجہ سے کہتے ہیں کیونکہ یہ اصلی تکبیروں کے علاوہ ہوتی ہیں،یعنی قیام کے دوران  اصلی تکبیرات تین ہیں ،تکبیر تحریمہ، دو رکوع کی تکبیرات اور چھ تکبیرات زائد ہیں۔

 

کن  تکبیروں کے بعد ہاتھ باندھتے ہیں اور کن کے بعد نہیں باندھتے ؟

عید کی نماز میں جن تکبیروں کے بعد کچھ پڑھنا ہے، اس میں ہاتھ باندھتے ہیں اور جن کے بعد کچھ نہیں پڑھنا اس میں ہاتھ نہیں باندھتے ۔

 

 

عید کی نماز کا مکمل طریقہ | Eid ki Namaz ka tarika (Step by Setp) 

نیت

سب سے پہلے اس طرح نیت کی جائے گی ، میں نیت کرتا ہوں عید الفطر یا عید الاضحی کی (جو بھی عید ہو آپ نے اس کا نام لینا ہے)ساتھ چھ زائد تکبیرات کے، خاص واسطے اللہ تعالی کے، پیچھے اس امام صاحب کے ، منہ میرا خانہ کعبہ شریف کی طرف۔ اللہ اکبر

ثناء

اس کے بعد ہاتھ باندھ لیں اور ثناء پڑھیں یعنی سبحانک اللھم

 

ثناء کے بعد تین تکبیرات

ثناء کے بعد تین زائد تکبیرات ہوگی، پہلی دو کے بعد کچھ نہیں پڑھنا ،اس لیے ہاتھ اٹھا کر چھوڑ دیں گے باندھیں گے نہیں البتہ  تیسری تکبیر کے بعد قرات کرنی ہے،اس لیے تیسری تکبیر کےبعد ہاتھ باندھ لیں گے۔

 

قرات

ا س کے بعد قرات ہوگئی اور رکوع اور سجدے ہوں گے

دوسری رکعت

دوسری رکعت میں پہلے قرات ہو گی اور رکوع سے پہلے تین زائد تکبیرات ہوں گی اور آپ کو معلوم ہے کہ زائد تکبیرات میں ہاتھ اٹھاتے ہیں چوتھی تکبیر جو رکوع کیلئے ہو گی اس میں ہاتھ نہیں اٹھائیں گے، اس کے بعد سجدے ہوں گے اور التحیات کے بعد سلام پھیر دیا جائے گا ۔

 

اگر کوئی بات سمجھ نہ آئے تو کمنٹ میں پوچھ سکتے ہیں ۔




تبصرے